Pembatasan Sosial Diperpanjang Hingga 11 April

Pemerintah Korea Selatan memutuskan untuk memperpanjang pembatasan sosial hingga 2 minggu ke depan.

Pada 28 Maret 2021, Pemerintah Korea Selatan menetapkan level 2 pembatasan sosial di wilayah ibu kota Seoul dan sekitarnya serta level 1,5 untuk wilayah non ibu kota hingga 11 April 2021 pk. 24.00.

Pemerintah juga menetapkan bahwa pengunjung dilarang untuk makan di 21 bidang industri, seperti pertandingan olahraga, perpustakaan, galeri, museum, pameran, dan bazar.

Akan diberikan masa tenggang untuk persiapan terlebih dahulu pada 29 Maret hingga 4 April 2021.

Setelah masa tenggang selesai, masyarakat yang kedapatan makan di salah satu tempat tersebut akan dikenakan denda sebesar 100.000 KRW per orang.

Selain itu, kebijakan dasar terkait pencegahan Covid-19 lainnya tetap wajib untuk dilaksanakan oleh masyarakat yang berkunjung ke fasilitas umum. Kebijakan tersebut adalah memakai masker, pengumuman mengenai kebijakan pemerintah terkait Covid-19, melakukan pendaftaran pengunjung yang keluar masuk, melakukan penyemprotan disinfektan, dan membuka jendela untuk melakukan pertukaran udara. Selain itu, ada 3 buah penambahan yang diwajibkan oleh pemerintah, yaitu tidak makan di dalam ruangan, larangan masuk untuk orang yang bergejala, dan juga menetapkan manajer karantina.

Denda Bagi Pelanggaran Kebijakan Covid-19 Bagi Usaha yang Memperkerjakan Pekerja Asing

Dari sejumlah usaha yang mempekerjakan pekerja migran dan menempatkan mereka untuk tinggal di asrama, 357 buah di antaranya didenda karena melanggar kebijakan yang terkait dengan Covid-19.

Pada 26 Maret 2021, Kementerian Tenaga Kerja dan Buruh mengumumkan telah melakukan inspeksi khusus di 11.000 tempat usaha yang mempekerjakan lima orang atau lebih pekerja asing dan memiliki asrama. 357 buah di antaranya terkena denda.

Denda dikenakan karena tempat usaha tersebut tidak mematuhi aturan dengan benar seperti tidak mengenakan masker di tempat kerja setiap saat, tidak memasang pelindung di meja makan, dan tidak membatasi pergerakan di asrama.

Selain itu, Kementerian Tenaga Kerja dan Buruh mengumumkan bahwa pemerintah sedang melakukan inspeksi mandiri di 23.000 tempat usaha dengan kurang dari 5 pekerja asing setelah menyelesaikan inspeksi tempat usaha yang mempekerjakan lima atau lebih pekerja asing di seluruh penjuru Korea Selatan.

Dari jumlah tersebut, sekitar 2.000 tempat usaha yang rentan terhadap infeksi akan langsung diperiksa di tempat.

Bantuan Pemerintah untuk Mencegah Kecelakaan Fatal di Usaha Kecil

Pemerintah Korea Selatan secara intensif mendukung pembangunan infrastruktur keselamatan untuk usaha berskala kecil di industri konstruksi dan manufaktur, di mana korban jiwa akibat kecelakaan industri sering terjadi.

Pada 25 Maret 2021, Kementerian Tenaga Kerja dan Buruh mengumumkan langkah-langkah untuk mengurangi kematian dalam kecelakaan industri dan mengumumkan bahwa pemerintah akan memperkuat panduan teknis untuk mencegah kecelakaan industri untuk 110.000 lokasi konstruksi kecil dan menengah.

Selain itu, untuk memperkuat tanggung jawab subkontraktor, biaya pemasangan fasilitas keselamatan harus tercermin dalam biaya konstruksi, dan instansi asli saat memasang fasilitas keselamatan secara langsung.

اپریل سے سئول کے اضلاع میں مالی امداد فراہم کی جائے گی

سیئول میٹروپولیٹن حکومت اور اس کے 25 اضلاع کی جانب سے اپریل سے چھوٹے کاروباروں کو مجموعی طور پر 500 ارب وان کی کثیر رقم سے کاروباری مدد فراہم کرنے پر اتفاق کیا ہے

22 مارچ کی ایک رپورٹ کے مطابق ، چھوٹے کاروباری افراد اور کمزور گروہوں سمیت 700،000 افراد کو سیئول سے 200 ارب ون اور اضلاع سے 300 ارب وان فراہم کئے جائیں گے

کورین حکومت کی جانب سے کل 4 بار قدرتی آفات کے پیش نذر امداد فراہم کی جا رہی ہے. لیکن اس مرتبہ الگ سے زیادہ نقصان اٹھانے والے افراد وغیرہ کو امداد فراہم کی جائے گی

اس کے ساتھ چھوٹے درجے کے صنعت کاروں کو 500 ارب وان کے بلا سود قرض بھی فراہم کئے جائیں گے

ایک مقررہ حد سے کم آمدن والے تقریباً 4 لاکھ 60 ہزار افراد کو فی کس 1 لاکھ وان فراہم کیا جائے گا

계속 “اپریل سے سئول کے اضلاع میں مالی امداد فراہم کی جائے گی” 읽기

سال کے دوسرے حصے میں بجلی کی قیمت میں اضافہ نہ کرنے کا فیصلہ

تیل کی بین الاقوامی قیمتوں میں اضافے کے باوجود کورین حکومت نے سال کے دوسرے حصے میں صنعت کاروں کیلئے بجلی کی قیمت میں اضافہ نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے

 ایندھن کی قیمتوں میں اضافے کے رجحان کے پیش نظر، سات سال کے دوران پہلی بار بجلی کی قیمتوں میں اضافہ متوقع تھا

مختصر مدت میں تیل کی قیمتوں میں تیزی سے اضافہ۔, فیول پرائس انڈیکشن سسٹم کے آغاز کے ساتھ ہی حکومت نے ہنگامی صورت حال میں زر مبادلہ کی شرح میں ایڈجسٹمنٹ ملتوی کرنے کا ارادہ ظاہر کیا ہے.

بظاہر یہ فیصلہ اس لئے کیا گیا تھا کہ اگر بجلی کی قیمت میں اضافہ ہوتا ہے تو ، دوسری اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ ہوسکتا ہے

계속 “سال کے دوسرے حصے میں بجلی کی قیمت میں اضافہ نہ کرنے کا فیصلہ” 읽기

گزشتہ برس کورین اقتصادی معیشت ‘تجارتی بحران سرپلس’

گزشتہ برس کورونہ کے پھیلاؤ کی وجہ سے پیدا ہونے والے معاشی بحران کے باوجود، کوریا کی اقتصادی آمدن اس کے اخراجات سے کہیں زیادہ پائی گئی، جب کہ کل آبادی سرپلس نے ایک نیا ریکارڈ قائم کیا

کم آمدن والے گھرانوں کی صورت میں، اخراجات میں اضافہ جبکہ زیادہ آمدن والے گھرانوں کے منافع میں تیزی سے اضافہ دیکھنے میں آیا جو کہ آمدن میں فرق کا باعث بنا

رواں ماہ 22 مارچ کو قومی ادارہ برائے اعداد و شمار کی جانب سے اقتصادی معیشت پر مبنی جائزہ کے نتائج کے مطابق گزشتہ برس پورے ملک میں 2 یا 2 سے زائد افراد پر مشتمل خاندانوں میں اخراجات کے بعد بچنے والی رقم کا سرپلس  تناسب مجموعی طور پر 30 فیصد سے زیادہ تھا، جو کہ سہ ماہی میں 32.9 فیصد، ششماہی میں 32.3 فیصد, نو ماہی میں 30.9 فیصد اور سال کے آخر میں 30.4 فیصد رہا

اقتصادی معیشت کا جائزہ اور اعداد و شمار کا ریکارڈ 2003 سے محفوظ کیا جا رہا ہے، جبکہ سہ ماہی سرپلس 30 فیصد تک محض 5 مرتبہ ہی گیا تھا. 2016 میں ایک بار باقی 4 بار 2020 میں یہ صورت حال دیکھنے میں آئی

چوتھے حصے میں 20 فیصد کم ترین آمدن والے خاندانوں سرپلس کا تناسب منفی 17.8 فیصد ریکارڈ ہوا، سب سے زیادہ آمدن والے 20 فیصد خاندانوں کے سرپلس کا تناسب 42.8 فیصد تھا

ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ اعداد و شمار سماجی دوری کی وجہ سے صارفین کے اخراجات میں کمی، نیز مستقبل کے معاشی جھٹکوں سے نمٹنے کیلئے صارفین کی جانب سے اخراجات کو کنٹرول کرنے کا نتیجہ ہے

계속 “گزشتہ برس کورین اقتصادی معیشت ‘تجارتی بحران سرپلس’” 읽기

67.8 فیصد کورین شہری کووڈ 19 ویکسین لگوانا چاہتے ہیں

ایک سروے کے مطابق ہر 10 میں سے تقریباً 7 کورین شہری کووڈ 19 کی ویکسین کروانے کا ارادہ رکھتے ہیں

رواں ماہ 17 اور 18 مارچ کو حکومت کی جانب سے 18 سال سے زائد عمر کے 1000 افراد کے تحت ایک عوامی سروے کیا گیا، جس کے نتائج 24 مارچ کو کورین حکومت کی جانب سے منظر عام پر لائے گئے، جو کہ مندرجہ ذیل ہیں

سروے میں شامل افراد میں سے 968 افراد نے ابھی ویکسین نہیں لگوائی جبکہ 67.8 فیصد افراد ویکسین لگوانے کا ارادہ رکھتے ہیں، 12.9 فیصد افراد ویکسین نہیں کروانا چاہتے. نیز 19.1 فیصد نے فی الوقت لاعلمی کا اظہار کیا

계속 “67.8 فیصد کورین شہری کووڈ 19 ویکسین لگوانا چاہتے ہیں” 읽기

غیر ملکی محنت کشوں کیلئے کورونہ ٹیسٹ کا حکم امتیازی سلوک، قومی کمیشن برائے انسانی حقوق

نیشنل ہیومن رائٹس کمیشن کی جانب سے فیصلہ سامنے آیا ہے کہ مقامی حکام کی جانب سے غیر ملکی شہریوں کو کورونہ ٹیسٹ کیلئے مجبور کرنا امتیازی سلوک ہے

مارچ 22 کو قومی کمیشن برائے انسانی حقوق نے اخذ کیا کہ صرف غیر ملکی ملازمین اور محنت کشوں کو ہی نشانہ بنا کر کورونہ ٹیسٹ کروانے کیلئے کچھ مقامی حکام کی جانب سے مجبور کیا جانا غیر ملکی شہریوں کے خلاف امتیازی رویہ ہے

ہیومن رائٹس کمیشن نے کورین حکومت اور مقامی رہنماؤں کو متنبہ کیا ہے کہ انسانی حقوق کے اصولوں پر مبنی غیر متعصبانہ روک تھام کی پالیسی پر عمل درآمد، اور کورونہ کی وبا کا آسانی سے نشانہ بن سکنے والے غیر ملکی محنت کشوں کی حفاظت کو یقینی بنایا جائے

اس کے علاوہ ، سیئول اور دیگو ، گیونگی ، کانگ وون ، اور جنوبی جولا صوبہ وغیرہ میں تمام غیر ملکی ملازمین ، بشمول آجروں اور غیر قانونی غیر ملکی کارکنوں کے کووڈ 19 کا ٹیسٹ کروانے کا حکم دیا گیا ہے

계속 “غیر ملکی محنت کشوں کیلئے کورونہ ٹیسٹ کا حکم امتیازی سلوک، قومی کمیشن برائے انسانی حقوق” 읽기

Pendiri dan Pemilik Shin Ramyeon Wafat

Pada 27 Maret 2021, Shin Chun-ho, pemimpin dan pemilik Nongshim, perusahaan yang memproduksi Shin Ramyeon, wafat pada usia 92 tahun.

Pihak Nongshim menyatakan bahwa Shim wafat karena penyakit kronis pada tanggal 27 Maret 2021 pk. 03.38.

Shin mendirikan Nongshim pada tahun 1965 dan mengembangkan produk seperti Shin Ramyeon, Chapaghetti, dan kerupuk udang.

Shin lahir di Ulsan pada tanggal 1 Desember 1930 dan merupakan saudara dari almarhum pendiri Lotte, Shin Gyeok-ho, CEO kehormatan Lotte Group.